"کیا، کیوں اور کیسے" کی تلاش میں بھٹکتے پاگلوں کی پناہ گاہ

طبیعیات خوبصورتی ہے

مجالس:

طبیعیات خوبصورتی ہے
لِنڈسے لیبلانک

رات کے دو بجے ہیں اور میں جاگ رہی ہوں۔ یونیورسٹی آف ٹورانٹو کی طبیعیات کی عمارت کے تہہ خانے میں موجود بصریات کی تجربہ گاہوں کی اس زیرِ زمین دنیا میں انسان کا وقت کا ہوش جاتا رہتا ہے۔

پائتھن پروگرام: کامپٹن اثر

کامپٹن اثر کا تجربہ کوانٹم میکانیات کی تاریخ میں ایک اہم سنگِ میل کی حیثیت رکھتا ہے۔ زیرِ نظر کوڈ پائتھن میں لکھا ہوا میرا پروگرام ہے جو کہ کامپٹن اثر کا ایک مظاہرہ آپ کے کمپیوٹر کی سکرین پر پیش کرتا ہے۔
اس پروگرام کو چلانے کے لیے آپ کو یہ سافٹ وئیر درکار ہوں گے۔
Python Programming Language
Visual Python
MatPlotLib

الیکٹرونکس ڈائجسٹ

مجالس:

الیکٹرونکس کے شائقین کے لئے ایک ویب سائٹ
http://www.edl.cu.cc/
اس پر اردو میں بنیادی اسباق ،کیلکولیٹرز، عملی سرکٹس اور بہت کچھ موجود ہے۔

آسیلوسکوپ کا استعمال

(امیر سیف اللہ سیف)

ایڈیشن اول - 2007

پیشکس : الیکٹرونکس ڈائجسٹ پبلیکیشنز

کتاب کے جملہ حقوق برائے اشاعت و طباعت بحق مصنف محفوظ ہیں

مصنف کی باقاعدہ پیشگی تحریری اجازت کے بغیر اس کتاب یا کتاب کے کسی حصے کی دوبارہ اشاعت، منتقلی، ترجمہ، فوٹو کاپی، ریکارڈنگ یا کسی بھی ذریعے سے نقل، کاپی رائٹ ایکٹ (ترمیمی) مجریہ 1992 کے تحت جرم ہے۔ کتاب پر تبصرہ کرنے کے دوران میں کتاب کے کسی حصے کا مختصرا“ حوالہ یا پیرہ گراف کی نقل، کتاب و مصنف کے مکمل حوالے کے ساتھ کی جا سکتی ہے۔
نوٹ : یہ کتاب اور الیکٹرونکس کی مفید معلومات کے لئے ویب سائٹ http://www.electronicsdigest.cu.cc ملاحظہ فرمائیں۔ اگر یہ لنک کام نہ کرے تو براہ راست http://ed.bizatweb.com پر جائیں۔ (سیف)

چائے

(امیر سیف اللہ سیف)

شمسی توانائی

مجالس:

(امیر سیف اللہ سیف)

پاکستان دنیا کے ان خوش نصیب ممالک میں سے ایک ہے جہاں سال کےبیشتر حصے میں سورج کی روشنی اور اس کی حرارت سے فائدہ حاصل کیا جا سکتا ہے۔ ایک جائزے کے مطابق پاکستان میں سورج کی روشنی اور حرارت سال کے 250 سے 320 دن تک دستیاب رہتی ہے۔ یہ وہ ان مول اور بیش قیمت توانائی ہے جو ہمیں قدرت کی طرف سے بلاقیمت دستیاب ہے لیکن اسے ہم ضائع کر دیتے ہیں۔

سائنسی علوم کے حصول میں زبان کا کردار

مجالس:

کمپیوٹر سائنس سے کچھ نہ کچھ واقفیت رکھنے والے تو انٹرپرٹر اور کمپائلر کے فرق سے واقف ہوں گے ہی۔ جن کی واقفیت "کچھ نہ پُچھ" ہے، ان کی سہولت کے لیے پہلے ان دونوں کا مختصر تعارف:
کمپیوٹر کے پروگرام دو طرح کی زبانوں میں لکھے جاتے ہیں۔ زیریں سطحی زبانیں (لو لیول لینگویجز) جنہیں کمپیوٹر براہِ راست سمجھ لیتا ہے۔ اور بلند سطحی زبانیں (ہائی لیول لینگویجز) جن کو کمپیوٹر براہِ راست نہیں سمجھ پاتا اور ان کے لیے اسے مترجم سافٹ وئیر کی ضرورت پڑتی ہے جو اسے کمپیوٹر کی اپنی زبان میں تبدیل کر دیں۔ بلند سطحی زبانوں کی کچھ مثالیں سی، سی پلس پلس، پائتھن، پی ایچ پی، روبی اور پرل ہیں۔

پاکستان سائنس کلب

مجالس:

دو دن پہلے ہی اس ویب سائٹ سے واقفیت ہوئی ہے۔ یہ لوگ پاکستانی طلبائے علم کی سائنسی مواد میں دلچسپی بڑھانے کے لیے کافی محنت کر رہے ہیں۔ اگرچہ زیادہ تر مواد انگریزی ہی میں ہے لیکن امید ہے کہ آہستہ آہستہ اردو میں بھی مواد بڑھے گا۔
http://paksc.org

22 اپریل - زمین کا دن

مجالس:

بسم اللہ الرحمٰن الرحیم۔
دنیا بھر میں 22 اپریل کو زمین کے دن کے طور پر منایا جاتا ہے۔ اس کا مقصد لوگوں میں زمین کے ماحول اور وسائل کے تحفظ کی اہمیت کا شعور پیدا کرنا ہے۔ اس اہم موقعے پر میں نے بھی ایک عدد مضمون لکھنے کا ارادہ تو کر رکھا تھا لیکن غیر متوقع حالات کی وجہ سے بروقت اطلاع بھی نہ دے پایا۔
جن لوگوں تک یہ اطلاع وقت پر پہنچ جائے، ان سے گزارش ہے کہ آج کا دن جیو اور ایکسپریس جیسے چینلوں کے بجائے نیشنل جیوگرافک اور ڈسکوری جیسے چینل دیکھتے ہوئے گزاریں کیونکہ ان پر اس موقعے کے لیے خصوصی پروگرام نشر کیے جائیں گے۔

وقت میں سفر

مجالس:

وقت یا زمان میں سفر کا مفہوم یہ ہے کہ مکان کی طرح زمان میں بھی زمان کے مختلف نقاط میں آگے یا پیچھے منتقل ہوا جائے، وقت میں سفر کے بعض تصورات میں متوازی کائناتوں تک منتقلی کو بھی ممکن قرار دیا گیا ہے، انیسوی صدی کی سائنس فکشن کہانیوں میں بھی وقت میں سفر کو ممکن قرار دیا گیا، ماضی میں نظریہ اضافیت کے پیش نظر وقت میں سفر صرف مستقبل کی طرف ہی ممکن سمجھا گیا تاہم بعض جدید اور آئن سٹائن کے نظریہ اضافیت پر تحقیق سے یہ ثابت کیا گیا ہے کہ وقت میں ماضی کی طرف سفر ممکن نہیں ہے.

صفحات

Subscribe to تجسس سائنس فورم RSS